7

سفیر سے ملاقات‘ خلیجی ممالک سے بہتر تعلقات کیلئے امیرکویت کی کوششیں قابل ستائش: طاہر اشرفی

Hits: 0

لاہور (خصوصی نامہ نگار) پاکستان تمام بلاد اسلامیہ کے درمیان محبت و اخوت کے تعلقات چاہتا ہے۔ خلیجی ممالک کے ساتھ پاکستان کے مضبوط تعلقات ہیں۔ پچاس لاکھ پاکستانی خلیجی ممالک میں خدمات انجام دے رہے ہیں۔ خلیجی ممالک میں تعلقات کی بہتری کیلئے امیر کویت کی کوششیں قابل ستائش ہیں۔ العلاء  کانفرنس کے بعد اسلامی دنیا کے مختلف ممالک کے درمیان تعلقات میں بہتری آئے گی۔ یہ بات چیئرمین پاکستان علماء کونسل و نمائندہ خصوصی وزیر اعظم پاکستان برائے بین المذاہب ہم آہنگی و مشرق وسطیٰ حافظ محمد طاہر محمود اشرفی نے پاکستان میں کویت کے سفیر نصار عبد الرحمن المطیری سے ملاقات کے بعد کہی۔ انہوں نے کہا کہ مشرق وسطیٰ میں موجود پاکستانیوں کے مسائل کے حل کیلئے وزیر اعظم پاکستان عمران خان بہت دلچسپی لے رہے ہیں۔ خلیجی ممالک میں پاکستانیوں کیلئے روزگار کے نئے مواقع پیدا ہو رہے ہیں اور انشاء اللہ مستقبل میں خلیجی ممالک میں ہونے والی تعمیر نو میں پاکستانیوں کا ماضی کی طرح اہم کردار ہو گا۔ انہوں نے کہا کہ العلاء میں خلیج تعاون کونسل کے ہونے والے اجلاس کی کامیابی کیلئے جو کردار امیر کویت، خادم الحرمین الشریفین شاہ سلمان بن عبدالعزیز، امیر قطر اور ولی عہد سعودی عرب نے ادا کیا اور اس مصالحتی عمل میں مصر، بحرین، عمان اور امارات نے جس طرح واضح کردار ادا کیا وہ امت مسلمہ کیلئے خوشخبری ہے۔ انہوں نے کہا کہ پاکستانی ڈاکٹرز کرونا کے ایام میں کویت گئے ہیں، یہ پاکستان کویت دوستی کی عظیم مثال ہے۔ مستقبل قریب میں کویت سعودی عرب سمیت بہت سارے اسلامی ممالک کے وفود پاکستان آ رہے ہیں جس سے مختلف شعبوں میں تعاون بڑھے گا۔ پاکستان میں کویت کے سفیر نصار عبد الرحمن المطیری نے کہا کہ پاکستان امت مسلمہ کا اہم ترین ملک ہے۔ پاکستان اور کویت کے تعلقات دو قوموں کے تعلقات ہیں۔ کویتی قیادت اور عوام پاکستان کے ساتھ تمام شعبوں میں تعلقات بڑھانا چاہتے ہیں۔ دنیا اسلام میں پاکستان کے مقام کو نظر انداز نہیں کیا جا سکتا۔ ملاقات میں حافظ محمد طاہر محمود اشرفی نے کویتی سفیر کو امیر کویت اور وزیر خارجہ کویت کی عرب ممالک کے درمیان تعلقات کی بحالی کیلئے کردار پر مبارکباد پیش کی اور شکریہ ادا کیا۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں