14

ایبٹ آباد میں کرونا وائرس کا پہلا مشتبہ کیس منظر عام پر آگیا۔

Hits: 3

ایبٹ آباد میں کرونا وائرس کا پہلا مشتبہ کیس منظر عام پر آگیا۔ چائنہ سے واپس آنیوالے نوجوان کو کمرے میں بند کردیاگیا۔ فرار ہونے کے بعد دوبارہ پکڑلیاگیا۔اس ضمن میں ذرائع نے وائس آف ہزارہ کو بتایاکہ گلگت کا رہائشی طالبعلم سراج الدین تین سال کے بعد پاکستان آیا۔ نوجوان کو شدیدبخار میں ایوب ٹیچنگ ہسپتال لایاگیا۔ جہاں ڈاکٹروں نے ابتدائی چیک اپ کے دوران کرونا وائر س سے متاثرہ قرار دیا۔ کرونا وائرس کا نام سنتے ہی نوجوان ایوب ٹیچنگ ہسپتال سے بھاگ گیا۔ تاہم ہسپتال انتظامیہ نے کافی تگ و دوکے بعد اسے پکڑ کر ہسپتال میں قائم کئے جانیوالے آئیسولیشن روم میں بند کردیاہے۔ جہاں سخت سیکورٹی کا انتظام کیاگیاہے۔ ہسپتال ذرائع کے مطابق کرونا وائرس کی جانچ کیلئے ہمارے پاس لیبارٹری میں استعمال ہونیوالی کٹ نہیں ہیں۔ پمز ہسپتال اسلام آباد کو اس کے خون کے نمونے ارسال کردیئے گئے ہیں۔ جن کے نتائج دو روز کے بعد آنے کی توقع ہے۔ جبکہ دوسری جانب ہسپتال کے عملے نے حکومت سے مطالبہ کیاہے کہ کرونا وائرس ایک جان لیوا وائرس ہے۔ اس مشتبہ نوجوان کو فوری طور پر ایوب ٹیچنگ ہسپتال سے پمز ہسپتال اسلام آباد منتقل کیاجائے۔ تاکہ کرونا وائرس کے پھلاؤ کو روکا جاسکے۔ ایوب ٹیچنگ ہسپتال میں انتظامات نہ ہونے کی وجہ سے کچھ بھی ہوسکتاہے۔

#wpdevar_comment_1 span,#wpdevar_comment_1 iframe{width:100% !important;}.fb_iframe_widget span{width:460px !important;} .fb_iframe_widget iframe {margin: 0 !important;} .fb_edge_comment_widget { display: none !important; }

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں